نعتِ رسولِ آخر صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم

نعتِ رسولِ آخر صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم

کتنا بڑا ہے مجھ پہ یہ احسانِ مصطفٰے
کہتے ہیں لوگ مجھ کو ثنا خوانِ مصطفےٰ

جبریل سے مجھے بھی ہے نسبت قریب کی
وہ بھی ہے اور میں بھی ہوں دربانِ مصطفےٰ

بخشش نثار ہونے کو آئی ہزار بار
دیکھا جو مجھ پہ سایہ دامانِ مصطفےٰ

دوزخ میں جائے گا نہ کوئی اُمتی مرا
اللہ سے ہوا ہے یہ پیمانِ مصطفےٰ

اک ایک کرکے بند ہوئے سارے مے کدے
اس شان سے کھلا ہے خمستانِ مصطفےٰ

یا رب مجھے بھی دیدہ حسّان کر عطا
حاصل ہو اس گدا کو بھی عرفانِ مصطفےٰ

اعظم کبھی مجھے بھی تو بلوائیں گے حضور
اک دن بنوں گا میں بھی تو مہمانِ مصطفٰے

شاعر: اعظم چشتی

اپنا تبصرہ بھیجیں